قرآن مجيد

سورۃ الضحى
اپنا مطلوبہ لفظ تلاش کیجئیے۔

[ترجمہ محمد جوناگڑھی][ترجمہ فتح محمد جالندھری][ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
نمبر آيات تفسیر

--
بِسْمِ اللَّـهِ الرَّحْمَـنِ الرَّحِيمِ﴿﴾
شروع کرتا ہوں اللہ تعالٰی کے نام سے جو بڑا مہربان نہایت رحم کرنے والا ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

1
وَالضُّحَى (1)
والضحى۔
[اردو ترجمہ محمد جونا گڑھی]
قسم ہے چاشت کے وقت کی۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ فتح محمد جالندھری]
آفتاب کی روشنی کی قسم۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
قسم ہے دھوپ چڑھنے کے وقت کی!
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تفسیر ابن کثیر
تفسیر آیت نمبر 1,2,3,4,5

2
وَاللَّيْلِ إِذَا سَجَى (2)
والليل إذا سجى۔
[اردو ترجمہ محمد جونا گڑھی]
اور قسم ہے رات کی جب چھا جائے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ فتح محمد جالندھری]
اور رات (کی تاریکی) کی جب چھا جائے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
اور رات کی جب وہ چھا جائے!
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تفسیر ابن کثیر
اس آیت کی تفسیر پچھلی آیت کے ساتھ کی گئی ہے۔

3
مَا وَدَّعَكَ رَبُّكَ وَمَا قَلَى (3)
ما ودعك ربك وما قلى۔
[اردو ترجمہ محمد جونا گڑھی]
نہ تو تیرے رب نے تجھے چھوڑا ہے اور نہ وه بیزار ہو گیا ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ فتح محمد جالندھری]
کہ (اے محمدﷺ) تمہارے پروردگار نے نہ تو تم کو چھوڑا اور نہ (تم سے) ناراض ہوا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
نہ تیرے رب نے تجھے چھوڑا اور نہ وہ ناراض ہوا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تفسیر ابن کثیر
اس آیت کی تفسیر پچھلی آیت کے ساتھ کی گئی ہے۔

4
وَلَلْآخِرَةُ خَيْرٌ لَكَ مِنَ الْأُولَى (4)
وللآخرة خير لك من الأولى۔
[اردو ترجمہ محمد جونا گڑھی]
یقیناً تیرے لئے انجام آغاز سے بہتر ہوگا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ فتح محمد جالندھری]
اور آخرت تمہارے لیے پہلی (حالت یعنی دنیا) سے کہیں بہتر ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
اور یقینا پیچھے آنے والی حالت تیرے لیے پہلی سے بہتر ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تفسیر ابن کثیر
اس آیت کی تفسیر پچھلی آیت کے ساتھ کی گئی ہے۔

5
وَلَسَوْفَ يُعْطِيكَ رَبُّكَ فَتَرْضَى (5)
ولسوف يعطيك ربك فترضى۔
[اردو ترجمہ محمد جونا گڑھی]
تجھے تیرا رب بہت جلد (انعام) دے گا اور تو راضی (وخوش) ہو جائے گا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ فتح محمد جالندھری]
اور تمہیں پروردگار عنقریب وہ کچھ عطا فرمائے گا کہ تم خوش ہو جاؤ گے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
اور یقینا عنقریب تیرا رب تجھے عطا کرے گا، پس تو راضی ہو جائے گا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تفسیر ابن کثیر
اس آیت کی تفسیر پچھلی آیت کے ساتھ کی گئی ہے۔

6
أَلَمْ يَجِدْكَ يَتِيمًا فَآوَى (6)
ألم يجدك يتيما فآوى۔
[اردو ترجمہ محمد جونا گڑھی]
کیا اس نے تجھے یتیم پا کر جگہ نہیں دی۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ فتح محمد جالندھری]
بھلا اس نے تمہیں یتیم پا کر جگہ نہیں دی؟ (بےشک دی)۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
کیا اس نے تجھے یتیم نہیں پایا، پس جگہ دی۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تفسیر ابن کثیر
تفسیر آیت نمبر 6,7,8,9,10,11

7
وَوَجَدَكَ ضَالًّا فَهَدَى (7)
ووجدك ضالا فهدى۔
[اردو ترجمہ محمد جونا گڑھی]
اور تجھے راه بھوﻻ پا کر ہدایت نہیں دی۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ فتح محمد جالندھری]
اور رستے سے ناواقف دیکھا تو رستہ دکھایا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
اور اس نے تجھے راستے سے ناواقف پایا تو راستہ دکھا دیا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تفسیر ابن کثیر
اس آیت کی تفسیر پچھلی آیت کے ساتھ کی گئی ہے۔

8
وَوَجَدَكَ عَائِلًا فَأَغْنَى (8)
ووجدك عائلا فأغنى۔
[اردو ترجمہ محمد جونا گڑھی]
اور تجھے نادار پاکر تونگر نہیں بنا دیا؟۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ فتح محمد جالندھری]
اور تنگ دست پایا تو غنی کر دیا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
اور اس نے تجھے تنگدست پایا تو غنی کر دیا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تفسیر ابن کثیر
اس آیت کی تفسیر پچھلی آیت کے ساتھ کی گئی ہے۔

9
فَأَمَّا الْيَتِيمَ فَلَا تَقْهَرْ (9)
فأما اليتيم فلا تقهر۔
[اردو ترجمہ محمد جونا گڑھی]
پس یتیم پر تو بھی سختی نہ کیا کر۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ فتح محمد جالندھری]
تو تم بھی یتیم پر ستم نہ کرنا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
پس لیکن یتیم، پس (اس پر) سختی نہ کر۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تفسیر ابن کثیر
اس آیت کی تفسیر پچھلی آیت کے ساتھ کی گئی ہے۔

10
وَأَمَّا السَّائِلَ فَلَا تَنْهَرْ (10)
وأما السائل فلا تنهر۔
[اردو ترجمہ محمد جونا گڑھی]
اور نہ سوال کرنے والے کو ڈانٹ ڈپٹ۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ فتح محمد جالندھری]
اور مانگنے والے کو جھڑکی نہ دینا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
اور لیکن سائل ، پس (اسے) مت جھڑک۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تفسیر ابن کثیر
اس آیت کی تفسیر پچھلی آیت کے ساتھ کی گئی ہے۔

11
وَأَمَّا بِنِعْمَةِ رَبِّكَ فَحَدِّثْ (11)
وأما بنعمة ربك فحدث۔
[اردو ترجمہ محمد جونا گڑھی]
اور اپنے رب کی نعمتوں کو بیان کرتا ره۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ فتح محمد جالندھری]
اور اپنے پروردگار کی نعمتوں کا بیان کرتے رہنا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
[اردو ترجمہ عبدالسلام بن محمد]
اور لیکن اپنے رب کی نعمت، پس (اسے) بیان کر۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
تفسیر ابن کثیر
اس آیت کی تفسیر پچھلی آیت کے ساتھ کی گئی ہے۔